بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

ایزی پیسہ سے رقم نکلواتے وقت کٹوتی کا حکم

ایزی پیسہ سے رقم نکلواتے وقت کٹوتی کا حکم

سوال

کیا فرماتے ہیں مفتیانِ کرام مندرجہ ذیل  مسئلہ کے بارے میں کہ ایزی پیسہ اکاؤنٹ سے جب پیسہ نکلواتے ہیں ، ہزار روپے پر بیس  روپیہ کٹوتی کی  جاتی ہے، کیا یہ”ربا‘‘شمار تو نہیں ہوگا؟

جواب

سوال میں مذکورہ  صورت سود کے ضمن میں نہیں آتی ، ایزی پیسہ ، جاز کیش  اکاؤنٹ سے رقم نکلواتے وقت کمپنی  سہولت فراہم کرنے کے پیسے کاٹتی ہے،جو کہ جائز ہے۔

وفي تكملة عمدة الرعاية:

ويكره السفتجة لأنه قرض وفيه نفع للمقرض لسقوط خطر الطريق،.......ويجب أن يعلم أن التي في زماننا المسماة  في لساننا(في الهندي "منى آڈر") ليس من هذا  ولا له حكم السفاتج؛لأن السفاتج كانت لسقو ط خطرالطريق وذا للوصول،....إن نجزم بمنعه تعطلت الأمور وكسدت التجارات وانقلبت الأحوال من اليسر إلى العسر.(كتاب الحوالة:رقم الحاشية:1،3199،ايچ ایم سعید).فقط واللہ اعلم بالصواب

دارالافتاء جامعہ فاروقیہ کراچی

فتویٰ نمبر: 175/150،154