بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

حالت ِ جنابت میں قرآن کریم کی تلاوت

حالت ِ جنابت میں قرآن کریم کی تلاوت

سوال

کیا فرماتے ہیں مفتیانِ کرام مندرجہ ذیل  مسئلہ کے بارے میں کہ ایک شخص  ہر دن رات کو سورۃ ملک اور سورۃ الم سجدہ پڑھتا ہےاس نے حدیث میں اس کے فضائل سنے ہیں ،اب یہ بندہ اگر حالت جنابت میں ہوتو یہ پڑھ سکتا ہے،یا نہیں ؟ کیونکہ قرآن پڑھنا تو جائز نہیں  ہے حالت جنابت میں ؟ اس کی وضاحت فرمادیں ۔ جزاک اللہ

جواب 

حالت جنابت میں یہ سورتیں  پڑھنا  جائز نہیں ،البتہ تسبیح و تہلیل ،حمد و ثناء اور ذکر و اذکار کرسکتا ہے ۔

لما في الدر مع الرد :

(ويمنع ) حل (وقراءة قرآن) بقصده  ولو دون آية من المركبات لا المفردات فلو قرأت الفاتحة على وجه الدعاء أو شيئا من الآيات التي فيها معنى الدعاء ولم ترد القراءة لا بأس به.(كتاب الطهارة،1535،ط:رشيدية)۔ فقط واللہ اعلم بالصواب

دارالافتاء جامعہ فاروقیہ کراچی

فتوی نمبر: 172/16