بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

آم کے فائدے

آم کے فائدے

محترم تنویر سرور

قارئین! گرمیاں شروع ہو چکی ہیں اوردن بدن گرمی کی شدت میں اضافہ ہوتا جائے گا، جہاں گرمیاں آتی ہیں وہاں ہمیں اپنے پسندیدہ پھل آم کو کھانا کا موقع بھی ملتا ہے۔ آم گرمیوں کے شروع میں آنا شروع ہو جاتے ہیں، جیسا کہ اب مارکیٹ میں آم موجود ہیں اور اگلے ماہ تک آم کی تمام اقسام موجود ہوں گی ۔ ترش پھلوں کے بعد آم دوسرا بڑا پھل ہے جو ہمارے ہاں کاشت کیا جاتا ہے۔ پنجاب اور سندھ آم کی کاشت کے لیے موزوں آب وہوا رکھتے ہیں۔ آم کی پیداوار میں بھارت پہلے نمبر پر ہے، جب کہ پاکستان کا پانچواں نمبر آتا ہے۔ آم کی تاثیر گرم ہوتی ہے، اس لیے ضروری ہے کہ جب بھی آپ آم کھائیں اس کے بعد کچی لسی کا استعمال ضرور کریں۔ آم کی لکڑی بھی تختیاں بنانے کے کام آتی ہے۔ آم گرمیوں کی سوغات ہے اور یہ ہمیں اپنے رب کی طرف سے ایک تحفہ ہے۔

آم کو پھلوں کا بادشاہ کہا جاتا ہے اور کھانے میں یہ پھل نہایت مزے دار ہوتا ہے۔ دیکھنے میں بھی یہ پھل خوش نظم نظر آتا ہے، اسی لیے اس کو ہر کوئی بڑی شوق سے کھاتا ہے ۔ آم کی بے شمار اقسام ہیں اور اس میں وٹامن اے، بی اور سی موجود ہیں۔ اس کے علاوہ پروٹین، کیلشیم، فاسفورس اور دوسرے اہم اجزاء پائے جاتے ہیں۔ آم ہمارے صحت کے لیے بھی بہت اچھے ہیں، آم کئی طرح سے استعمال ہو سکتے ہیں ،اگر یہ کچے ہوں تو پھر ان کا اچار ڈالا جاتا ہے اور آم کا اچار بھی سب کا پسندیدہ ہوتا ہے اور انتہائی مزے دار ہوتا ہے، پہلے لوگ گاؤں میں اچار ڈالا کرتے تھے، لیکن اب شہر کے لوگ بھی اس کو پسند کرتے ہیں۔ اس کے علاوہ آم کا مربہ بھی ڈالا جاتا ہے، جس کو چھوٹے بڑے سب ہی پسند کرتے ہیں۔ آم کی آئس کریم تو بچوں میں بے حد پسند کی جاتی ہے او راکثر لوگ آم کا جوس بھی نکال کر پیتے ہیں۔ تو آم کو جس حالت میں بھی لیں یہ نہایت ذائقہ دار ہوتا ہے۔

آم کے فائدے
∗.. آم قبض کشا ہے، یہ معدے او رجسم کو طاقت بخشتا ہے۔

∗.. اگر آپ کے معدے میں تیزابیت اور جلن ہے تو پھر آپ آم کا استعمال ضرور کریں۔ اس کے علاوہ آم آپ کے ہاضمے کو بھی درست رکھنے میں مدد کرتا ہے۔

∗..آم جسم میں (LDL) یعنی ہائی کولیسٹرول کو بھی قابو میں رکھتا ہے۔

∗.. ایسے کم زور افراد جن میں خون کی کمی ہو وہ آم ضرور کھائیں۔

∗.. آم پچاس سال کی عمر سے بڑی عورتوں کے لیے بہت مفید ہے ،کیوں کہ اس عمر میں کیلشیم او رآئرن کی کمی ہو جاتی ہے اور یہ دونوں اجزا آم میں موجود ہوتے ہیں۔

∗..آم کینسر اور دل کے امراض میں قوت مدافعت رکھتا ہے۔

∗..آم آنکھوں اور نظر کے لیے بھی فائدہ مند ہے، کیوں کہ اس میں وٹامن اے پایا جاتا ہے، جو آنکھوں کے لیے مفید ہے۔ اس سے آنکھ کی خارش سے بچا جاسکتا ہے۔

∗.. مجھے اکثر لوگ پوچھتے ہیں کہ ہم اپنا وزن کیسے بڑھائیں؟ تو جناب آم کا زیادہ سے زیادہ استعمال شروع کر دیں۔ آپ کا وزن بڑھ جائے گا اور کمزور لوگ موٹے ہو جائیں گے۔

∗..آم کا روزانہ استعمال آپ کی جلد کو صاف، چمک دار اور جھریوں سے محفوظ رکھتا ہے۔

∗.. اگر منھ کی بدبو کو دور کرنا ہو تو آم کی گٹھلی کو مسواک کی طرح دانتوں پر ملیں۔ دانت صاف اور مضبوط بھی ہوں گے او رمنھ کی بدبو سے بھی چھٹکارا مل جائے گا۔

∗.. آم یاداشت کو تیز کرنے میں ہماری مدد کرتا ہے، پڑھائی والے بچوں کو آم ضرور کھلائیں ،تاکہ وہ اپنا سبق آسانی سے یاد کر سکیں۔

∗..آم مثانے اور آنتوں کو طاقت مہیا کرتا ہے۔

∗..ایسے افراد جو بے خوابی کا شکار ہوں وہ آم کھانے کے بعد ٹھنڈے دودھ کا استعمال کریں۔

∗.. چہرے کے داغ دھبے دور کرنے کے لیے آم کا گودا چہرے پر مل لیں اور دس منٹ بعد ٹھنڈے پانی سے اپنا چہرہ دھولیں۔

∗.. بدن کی رنگت نکھارتا ہے۔