بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

ماہ محرم میں شادی

ماہ محرم میں شادی

سوال

ہمارے ہاں محرم کے مہینے کو سوگ کا مہینا قرار دیتے ہیں اور کہتے ہیں کہ اس مہینے میں شادی بیاہ ناجائز ہے۔
کیا واقعتاً محرم کا مہینہ سوگ کا مہینہ ہے اور اس میں شادی کرنا ناجائز ہے؟

جواب 

ماہ محرم کو ماتم اور سوگ کا مہینا قرار دینا ناجائز و حرام ہے، اس لیے کہ شریعت مطہرہ نے سوگ منانے کے لیے عام رشتہ داروں کو تین دن اور بیوہ کو چار مہینے دس دن تک اجازت دی ہے۔
اسی طرح اس مبارک مہینے میں شادی وغیرہ کو ناجائز سمجھنا سخت گناہ اور اہل سنت کے عقیدے کے خلاف ہے۔ اسلام نے جن چیزوں کو حلال اور جائز قرار دیا ہے ان کو اعتقاداً یا عملاً ناجائز اور حرام سمجھنے میں ایمان کا خطرہ ہے۔
لہٰذا مسلمانوں کوچاہیے کہ روافض اور شیعہ کے اعتقادات اور رسومات سے بچنے کی کوشش کریں۔ فقط واللہ اعلم بالصواب

دارالافتاء جامعہ فاروقیہ کراچی