جامعہ فاروقیہ کراچی ۔۔ انٹرنیشنل اسلامک یونی ورسٹی

سر کے درد کا قدرتی علاج

محترمہ سعدیہ کامران

سر کے درد سے پہلے عموماً شانے، گردن اور کھوپڑی میں کھچاؤ پیدا ہونے لگتا ہے۔ سر کے درد کی شدت کاانحصار فرد کی قوت ِ برداشت پر ہوتا ہے۔ درد ختم کرنے کے لیے بازار میں بہت سی دوائیں ملتی ہیں۔لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ جیسے ہی آپ کے سر میں سردرد ہو تو آپ گولیاں کھانے لگیں۔ ذیل میں ہم چند قدرتی علاج بتارہے ہیں، جن سے آپ سر کے پورے یا آدھے درد پر قابو پاسکتے ہیں۔

سیب کا سِرکہ
کافی عرصے سے یہ بات مشہور ہے کہ سیب کا سرکہ سر کا درد دُور کرنے کا شافی علاج ہے۔ ایک گلاس پانی میں سیب کے سِر کے کے دو چمچے ملالیں اور ایک چمچہ شہد بھی گھول لیں۔ پھر اس آمیزے کو گرم کریں اور اس کا بھاپ چہرے پر لیں۔ سانس لے کر بھاپ کو سینے میں بھی اتاریں۔ ایک چوتھائی پیالی سِرکے میں تین پیالی پانی ملا کر اور اسے اُبال کر یہ کام لیا جاسکتا ہے۔

سکون بخش تیل
اپنی پیشانی، کنپٹیوں او رگردن کے پچھلے حصے پر پودینے یا اسطو خودوس (لیونڈر) کا تیل ملیں، جس سے سر کا درد بتدریج ختم ہو جائے گا اور دماغ کو سکون ملے گا، اس لیے کہ یہ دونوں تیل خون کو جسم میں رواں رکھتے ہیں۔ اگر آپ کو ان تیلوں کی بُو تیز لگ رہی ہو تو ان میں پانی یازیتون کا تیل ملا کر انہیں ہلکا کر لیں۔

ادرک کی چائے
تھوڑی سی ادرک چھیل کر صاف کر لیں، پھر اس کے ٹکڑے کرکے پانی میں ہلا کر اُبالیں او راس چائے کو پی لیں۔ اسی چائے میں لیموں کے عرق کے چند قطرے ملا لیں۔ اس چائے کے پینے سے آپ کے دماغ کی شریانوں کی سوزش اور جلن میں کمی آجائے گی، جو سر کے درد کا سب سے بڑا سبب ہوتا ہے، ادرک دافع درد ہے اور ہضم کے نظام کو بھی فائدہ دیتی ہے۔ اس سے قے او رمتلی میں بھی کمی واقع ہوتی ہے، جو سر کے پورے اور آدھے درد کی بنا پر پیدا ہوتی ہے۔

پانی ،کافی، چائے اور کولا مشروبات پینے سے آپ کے جسم میں پانی کی کمی پیدا ہوسکتی ہے، جس کے نتیجے میں آپ کے سر میں دھماکے دار درد بھی ہو سکتا ہے۔ چناں چہ پانی زیادہ پییں۔ بظاہر یہ معمولی سی بات لگتی ہے، مگر اثر انگیز ہے۔ ایسی چیزیں کھائیں، جن میں پانی کی مقدار زیادہ ہوتی ہے، مثلاً کھیرا، چکوترا (گریپ فروٹ) یا تربوز وغیرہ۔



English
عربي

ابتداء
اپنے بارے میں
جامعہ فاروقیہ
الفاروق
اسلام
قرآن
کتب خانہ
منتحب سائٹس
This site is developed under the guidance of eminent Ulamaa of Islam. 
Suggestions, comments and queries are welcomed at info@farooqia.com
ابتداء  |  اپنے بارے میں  |  جامعہ فاروقیہ  |  الفاروق  |  اسلام  |  قرآن  |  کتب خانہ  |  منتخب سائٹس
No Copyright Notice.
All the material appearing on this web site can be freely distributed for non-commercial purposes. However, acknowledgement will be appreciated.