جامعہ فاروقیہ کراچی ۔۔ انٹرنیشنل اسلامک یونی ورسٹی

کیا فرماتے ہیں علمائے دین؟

دارالافتاء جامعہ فاروقیہ کراچی

موبائل کی دکان میں مختلف کاموں کی آمدنی کے احکام
سوال… کیا فرماتے ہیں علمائے کرام ومفتیان عظام مسئلہ ہذا کے بارے میں کہ ہمارے گاؤں میں ایک جامع مسجد ہے، مسجد سے کچھ فاصلے پر بازار میں اسی مسجد کی ایک دکان ہے، جو میں نے کرایہ پر لی ہوئی ہے او رمیں لوگوں کو موبائل میں گانے، فلمیں، نعتیں، قرآن پاک کی تلاوت اور بیانات وغیرہ بھر کر دیتا ہوں اور ساتھ ساتھ موبائلوں کی مرمت اور خرید وفروخت بھی اور ایزی لوڈ بھی کرتا ہوں۔

اب پوچھنا یہ ہے کہ ان سب چیزوں کی کمائی میرے لیے کیسی ہے؟ اور اس سے مسجد کو کرایہ ادا کرنا کیسا ہے؟برائے مہربانی قرآن وحدیث کی روشنی میں راہ نمائی فرمائیں۔

جواب… واضح رہے کہ گانے اور فلمیں ڈاؤن لوڈ کرنا (بھرنا) جائز نہیں اور ان سے حاصل شدہ آمدنی حرام ہے، البتہ نعتیں، قرآن مجید کی تلاوت اوربیانات وغیرہ کی آڈیو او رایسی ویڈیو، جس میں کسی جان دار کی تصویر نہ ہو، ڈاؤن لوڈ کرنا جائز ہے اوراس سے حاصل شدہ آمدنی بھی حلال ہے اور ایسی ویڈیو، جس میں کسی جان دار کی تصویر ہو، اس کا ڈاؤن لوڈ کرنا اور دیکھنا جائز نہیں اور اس سے حاصل شدہ آمدنی بھی ناجائز ہے، باقی موبائلوں کی مرمت، ان کی خرید وفروخت اور ایزی لوڈ کا کاروبار جائز ہے، لہٰذا اس سے حاصل شدہ آمدنی بھی حلال ہے۔

مذکورہ دکان کی آمدنی سے آپ مسجد کو کرایہ دے سکتے ہیں، کیوں کہ آپ کی غالب آمدنی حلال ہے، البتہ بہتر یہ ہے کہ مسجد کو کرایہ آپ حلال آمدنی والے حصے سے دیں اور جوکاروبار حرام ہے اس کو چھوڑ دیں ، ان شاء الله ، الله تعالیٰ آپ کے حلال کاروبار میں برکت عطا فرمائیں گے۔

بیٹی کی رخصتی کا مسنون طریقہ
سوال… کیا فرماتے ہیں مفتیان عظام اس مسئلہ کے بارے میں کہ فدوی کی بیٹی کا رشتہ آیا ہوا ہے، عام طور پر ہر کوئی اپنی بیٹی کو شادی ہال سے رخصت کرتا ہے، مجھے کسی نے مطلع کیا ہے کہ سنت طریقہ یہ ہے کہ اپنی بیٹی کو خود جا کر اپنے ہونے والے داماد کے گھر چھوڑ کر آنا چاہیے۔

از راہِ کرم قرآن وحدیث کی روشنی جواب عنایت فرمائیں۔

جواب…کتب حدیث میں اس بات کا ذکرہے کہ حضرت فاطمة الزہراء رضی الله عنہا کو نبی کریم صلی الله علیہ وسلم نے رخصتی کے موقع پر حضرت ام ایمن رضی الله عنہا کے ساتھ حضرت علی رضی الله عنہ کے گھر بھیجا تھا، لہٰذا مناسب اور پسندیدہ طریقہ تویہی ہے کہ خود لڑکی کے سرپرست یا گھر کی خواتین اسے لڑکے کے گھر پہنچا دیں، البتہ اگر لڑکے کی طرف سے کچھ افراد آکر لڑکی کو رخصت کرواکرلے جائیں تو اس میں بھی کوئی مضائقہ نہیں، لیکن بہرصورت خلاف شرع رسوم ورواج سے بچنے کا خاص اہتمام کیا جائے۔

بجلی کا بل ادا کرنے کے بجائے واپڈا والوں کو کچھ رقم کی ادائیگیکا حکم؟
سوال… کیا فرماتے ہیں مفتیان کرام اس مسئلے کے بارے میں کہ ہمارے علاقے میں لوگ اپنے باغوں کو بجلی کی موٹر کے ذریعے پانی سے سیراب کرتے ہیں لیکن بجلی کا میٹر نہیں ہوتا صرف باغ کے مالک اتنا کرتے ہیں کہ تحصیل کے جو واپڈا والے ہوتے ہیں ان کو سالانہ پانچ چھ ہزار روپے دیتے ہیں، تاکہ وہ ان کے تار وغیرہ نہ لے جائیں یا ان کی بجلی نہ کاٹیں۔ کیا ازروئے شرع باغ کے مالکان کے لیے ایسا کرنا جائز ہے؟

جواب…واضح رہے کہ جہاں باغات وغیرہ کو ٹیوب ویل کے ذریعے سیراب کیا جاتا ہے وہاں بجلی کا میٹر اگرچہ نہیں ہوتا، لیکن باغ کے مالکان پر حکومت کی طرف سے ماہانہ بل مقرر ہوتا ہے، اس لیے بل کی ادائیگی ضروری ہے ، اس طرح تار وغیرہ لے جانے کے خوف سے واپڈا والوں کو کچھ رقم ہاتھ میں پکڑا دینا جائز نہیں اور نہ ہی تحصیل کے واپڈا والوں کے لیے یہ رقم لینا جائز ہے، اس لیے کہ یہ رشوت کے زمرے میں آتی ہے اور رشوت لینا دینا دونوں حرام ہیں اور اس پر سخت وعیدیں آئیں ہیں، لہٰذا اس سے اجتناب ضروری ہے۔

فروٹ پیٹی میں رکھتے وقت عمدہ مال اوپر اور کمزور مال نیچے رکھنے کا حکم
سوال…کیا فرماتے ہیں مفتیان عظام اس مسئلے کے بارے میں کہ ہمارے علاقے میں بعض لوگ ایسے ہیں کہ سیب کی فصل تیار ہونے کے بعد خراب یا کمزور فروٹ پیٹی کے نیچے رکھتے ہیں اور اچھا فروٹ پیٹی کے اوپر، جو بہت خوش نما نظر آتا ہے۔ کیا اس طرح کرنا جائز ہے یا کہ نہیں؟

جواب…زندگی کے ہر شعبے میں فریب اور دھوکہ کو ناجائز قرار دیا گیا ہے، لہٰذا کریٹ کو اس طرح بھرنا کہ اوپر اچھی چیز ہو اور نیچے بالکل کمزور اور خریدنے والے کو اس کا علم نہ ہو اور نہ اس کو نیچے سے دیکھنے کا اختیار ہو، بلکہ وہ ظاہر کو دیکھ کر خرید لے ، تو بیچنے والے کے لیے اس طرح کرنا جائز نہیں، اس لیے کہ یہ دھوکہ ہے اور اگر مارکیٹ میں یہ طریقہ رائج ہے اور خرید نے والے کو پہلے سے اس کا علم ہو ، تو پھر یہ دھوکہ نہ ہو گا اور اس طرح کرنا درست ہو گا، لیکن خلاف اولیٰ ضرور ہو گا۔

مسبوق شخص اپنی بقیہ نماز کے لیے کب اٹھے؟
سوال… کیا فرماتے مفتیان کرام اس مسئلے کے بارے میں کہ مسبوق شخص اپنی قضا شدہ نماز کے لیے کب اٹھے گا، یعنی کہ امام کے ایک طرف سلام پھیرنے کے بعد یا دونوں طرف سلام پھیرنے کے بعد؟

جواب… مسبوق شخص اپنی بقیہ نماز مکمل کرنے کے لیے اس وقت اٹھے جب اس کو یقین ہو کہ امام پر سجدہ سہو لازم نہیں اور عام طور پر دوسرا سلام پھیرنے سے یقین حاصل ہو جاتا ہے ،لہٰذا دوسری طرف سلام پھیرتے ہی اسے کھڑے ہو کر اپنی نماز مکمل کر لینی چاہیے۔

ایک ہی ملک کی مختلف کرنسیوں اور غیر ملکی کرنسیوں کے تبادلے کا حکم
سوال… کیا فرماتے ہیں علمائے کرام اس مسئلہ کے بارے میں ایک ملک کی مختلف کرنسیوں کا باہم تبادلہ کمی بیشی کے ساتھ جائز ہے یا نہیں؟ اگر ناجائز ہے تو کیوں؟ نیز مروجہ کرنسی نقدی (سونا چاندی) کے حکم میں ہے یا فلوس نافقہ کے حکم میں؟ ایک ملک کی مختلف کرنسیاں مثلاً سو ،پانچ سو، پانچ ہزار کے نوٹ جنس واحد ہے یا اجناس مختلفہ؟

مختلف ممالک کی کرنسیوں کا باہم تبادلہ کمی وبیشی کے ساتھ جائز ہے یا نہیں؟ امید ہے مفصل ومدلل تحقیق سے مطلع فرمائیں گے۔

جواب… واضح رہے کہ ایک ملک کی کرنسی جنس واحد ہے، نوٹ کے چھوٹے بڑے ہونے سے جنس مختلف نہیں ہوتی اور کرنسی کے بارے میں راجح قول یہی ہے کہ فلوس نافقہ کے حکم میں ہے، سونے چاندی کے حکم میں نہیں ہے، نیز امام مالک او رامام محمد رحمہما الله فلوس میں تفاضل کو حرام قرار دیتے ہیں اور راجح بھی یہی ہے، بلکہ غیر معین ہونے کی صورت میں حضرات شیخیں کا بھی یہی موقف ہے ، لہٰذا کرنسی نوٹوں سے متعلق اس راجح قول کے مطابق ملکی کرنسی کا باہم تبادلہ کمی بیشی کے ساتھ جائز نہ ہو گا اور عدم جواز کی علت ربا ہے، جو کہ حرام ہے۔

مختلف ممالک کی کرنسیاں اجناس مختلفہ ہیں، کیوں کہ موجودہ دور میں کرنسی نوٹوں سے ان کی ذات او رمادہ مقصود نہیں ہوتا، بلکہ کرنسی نوٹ آج کل قوت خرید کے ایک مخصوص معیار کا نام ہے اور ہر ملک نے اس سلسلے میں الگ معیار مقرر کیے ہیں، مثلاً پاکستان میں روپیہ، سعودی عرب میں ریال وغیرہ کا معیار الگ الگ ہے، جو ملکوں کے مختلف ہونے سے بدلتا رہتا ہے ،لہٰذا جب مختلف ملکوں کی کرنسیاں اجناس مختلفہ ہیں، تو ان کی بیع تفاضل کے ساتھ درست ہو گی۔

نہار منھ پانی پینا سنت ہے؟
سوال… کیا صبح سویرے نہار منھ پانی پینا سنت سے ثابت ہے؟ سنن رسول الله صلی الله علیہ وسلم سے متعلق چند مشہور ومعروف کتب کا نام بھی تحریر فرمائیں۔

جواب… نہار منھ پانی پینے کو حضور اقدس صلی الله علیہ وسلم کی سنت کہنا درست نہیں، البتہ چوں کہ بعض روایات سے پانی میں شہد ملا کر پینا ثابت ہے، لہٰذا اگر صبح سویرے پانی پینے کے کسی طبی فائدے کو مدِ نظر رکھتے ہوئے کوئی شخص نہار منھ پانی پئے تو اس میں کوئی حرج نہیں۔ (واضح رہے کہ نہار منھ پانی پینے کی ممانعت سے متعلق روایات سند اً شدید ضعیف یا موضوع ہیں، احتیاطاً اس حکم کے ثبوت کا اعتقاد نہ رکھا جائے۔)

اپنی زندگی کو سنن رسول صلی الله علیہ وسلم سے آراستہ کرنے کے لیے مندرجہ ذیل کتب مفید رہیں گی:
”علیکم بسنتی“ (مولانا مفتی عبدالحکیم سکھروی رحمہ الله) ”اسوہٴ رسول اکرم صلی الله علیہ وسلم ( ڈاکٹر عبدالحئی عارفی رحمہ الله) پیارے نبی صلی الله علیہ وسلم کی پیاری سنتیں(مولانا حکیم اختر رحمہ الله)۔

دانتوں پر اگر مستقل خول چڑھا ہو تو غسل سے مانع نہیں
سوال… میرے دانتوں میں بہت تکلیف تھی، میری ایک طرف کی چاروں ڈاڑھوں میں کیپ ( خول) چڑھائے گئے ہیں اور دوسری طرف کی چاروں ڈاڑھوں میں چاندی یا مسالہ کی فلنگ (بھرائی) ہے، کیا میرا غسل ہو جائے گا؟

جواب…صورت مسئولہ میں اگر خول ( کیپ) نکالے نہیں جاسکتے تو مجبوری کی حالت میں غسل درست ہو جائے گا۔



English
عربي

ابتداء
اپنے بارے میں
جامعہ فاروقیہ
الفاروق
اسلام
قرآن
کتب خانہ
منتحب سائٹس
This site is developed under the guidance of eminent Ulamaa of Islam. 
Suggestions, comments and queries are welcomed at info@farooqia.com
ابتداء  |  اپنے بارے میں  |  جامعہ فاروقیہ  |  الفاروق  |  اسلام  |  قرآن  |  کتب خانہ  |  منتخب سائٹس
No Copyright Notice.
All the material appearing on this web site can be freely distributed for non-commercial purposes. However, acknowledgement will be appreciated.